ہوائی سفر میں سامان کی چوری سے بچنے کی چند حفاظتی تدابیر

بنت مشتاق نے 'دیس دیس کے رنگ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏15 مئی 2014

  1. بنت مشتاق

    بنت مشتاق رکن

    مراسلے:
    150
    ڈھیر ساری تیاریوں اور انتظامات کے بعد چھٹیوں یا دیگر کسی سفر پہ جانے کا وقت آتا ہے لیکن سفر میں سامان کھو جائے تو سفر کا نصف مزہ وہیں ختم ہو جاتا ہے ایک وقت تھا جب ہوائی سفر کو اس نقطہ نظر سے محفوظ سمجھا جاتا تھا لیکن آج کل ہوائی جہاز سے سفر کرنے والوں کو اکثر سامان کی گمشدگی کا سامنا کرنا پڑتا ہے ایسے واقعات آئے دن کسی نہ کسی مسافر کے ساتھ پیش آتے رہتے ہیں ایئر لائن اپنے اصولوں کے مطابق گمشدہ سامان کا کچھ فیصد ہی نقصانات کا ازالہ کرتی ہے اکثر سامان چوری ہو جانے کی وجہ سے لینے کے دینے پڑ جاتے ہیں وقت اور پیسہ تو تباہ ہوتا ہی ہے اور سفر کا سارا مزا کرکرا ہو جاتا ہے ایسے واقعات سے بچنے کے لیے ضروری ہے کہ سفر کرنے سے پہلے اور پرواز کے وقت کچھ باتوں کو ذہن میں رکھیں۔
    pia.jpg
    سامان ہلکا رکھیں
    صرف اتنا ہی سامان ساتھ رکھیں جو سفر میں ضرورت ہو اور جس کے بغیر کام نہ چل سکے بھاری بھرکم سامان کے ڈھیر یشانی کا سبب بن سکتے ہیں ان میں قیمتی چیزیں جیسے لیپ ٹاپ، GPS، ضروری دستاویز، پاسپورٹ، زیورات وغیرہ بند کر کے چیكنگ کروانا مصیبت کو دعوت دینا ہے اگرچہ سامان چوری ہو جانے پر ایئر لائن کچھ نہ کچھ نقصانات دیتی ہے لیکن وہ اتنا بھی نہیں ہوتا کہ قیمتی سامان کی قیمت بھر سکے اس لئے ڈھیروں سامان لاد کر چلنے کی عادت سے بچیں۔

    قیمتی چیزیں اپنےساتھ رکھیں
    کبھی بھی قیمتی اشیاء کو چیک ان بیگ میں نہ ڈالیں اگر آپ کے پاس ہلکا سامان ہے جو آپ کیبن میں لے کر جا سکتے ہیں تو مناسب یہی رہتا ہے کہ سامان کو چیک ان نہ کروایا جائے. اس کے دو فوائد ہیں ایک تو سامان کے کھو جانے کی امکانات کم ہوتے ہیں اور دوسرا، بیلٹ پر اپنے سامان کا انتظار کرنے میں وقت خراب نہیں کرنا پڑتا جی ہاں، اس کے لیے یہ یاد رکھنا پڑھتا ہے کہ سوٹ کیس کا سائز کیبن میں آنے کے قابل ہو۔

    اپنے سوٹ کیس کو خاص بنائیں
    ایک اور عام سی بات یہاں بہت کام آ سکتی ہے. چوری کرنے والے لوگ ہمیشہ ایسے بیگ پر ہاتھ صاف کرتے ہیں جو کہ دیکھنے میں عام ہوں، تاکہ بیلٹ پر سے بھی بیگ اٹھاتے ہوئے کسی کی توجہ ان کی طرف نہ جائےاگر آپکا بیگ بہت عام سا سیاہ یا نیلے رنگ کا ہے تو آپ سے کچھ فاصلے پر کھڑا شخص اس کو اٹھا بھی لے تب بھی آپ کی توجہ اس طرف نہیں جائے گی اس لئے بیگ خریدتے ہوئے کسی الگ سے رنگ کا بیگ پسند کریں یا اس کا سائز تھوڑا سا مختلف ہو آپ اپنے سادہ سیاہ، نیلے بیگ کے ہینڈل پر برنگ برنگی پٹی لگا کر یا اس کے اوپر کسی انوکھے رنگ کا ربن ریپنگ باندھ کر اسے منفرد بنا سکتے ہیں اسے آپ دور سے شناخت کرلیں گے اور چور اسے ہاتھ لگانے سے ڈریں گے۔

    مہنگے سوٹ کیس لے کر سفر نہ کریں
    کئی چور بیگ میں پڑے سامان کی بجائے مہنگے بیگ کی طرف زیادہ متوجہ ہو جاتے ہیں اس لئے خیال رکھیں کے زیادہ پر کشش، دیکھنے میں خوبصورت، مہنگے، دلکش رنگوں والے یا چمڑے کے خوبصورت سوٹ کیس لے کر سفر نہ کریں اس سے چرانےوالا نہ صرف بیگ کی وجہ سے متوجہ ہوتا ہے بلکہ اس کے دل میں یہ خیال بھی آتا ہے کہ اس اٹیچی کا مالک کافی امیر معلوم ہوتا ہے تبھی اس نے اتنا مہنگا بیگ خریدا اب اس کے اندر سامان بھی ایسا قیمتی ہی ہوگا اور اس کو چرانا فوائد کا سودا ہو سکتا ہے۔

    چستی برتیں
    جیسے ہی پتہ لگتا ہے کہ سامان چوری ہو گیا، اگلے ہی لمحے سامان کلیم کاؤنٹر پر جانا چاہئے تاکہ بیگ لے جانے والے کے جانے اور بیگ کھو جانے کی شکایت کے درمیان کا وقفہ کم ہو اور چور کو جلد پکڑا جا سکے ائيرلائنز عام طور پر ایک مقررہ وقت کی حد کے اندر ہی سامان کھو جانے کی شکایت وصول کر سکتی ہیں اگر اس وقت کی حد کے بعد شکایت کی جاتی ہیں تو ہرجانے کی امید کم رہ جاتی ہے۔

    ہوش رہیں
    جب آپ بیلٹ پر سے اپنا سامان اٹھا ک رہے ہوں توٹرالی پر رکھے سامان کی نگرانی کا ذمہ اپنے ساتھی کو دے دیں اگر ساتھ میں بچے ہیں تو یہ کام بچوں کے ذمہ بھی لگایا جا سکتا ہے اس طرح جب آپ کی توجہ بیلٹ پر آتے ہوئے سامان کی طرف ہوگی تو کوئی ٹرالی میں رکھے گئے آپ کے سامان کو لے کر رفوچكر نہیں ہو پائے گا۔

    وقت کا خیال رکھیں
    سامان کی حفاظت کے لئے وقت پر ہوائی اڈے پہنچنااور وقت سے سامان کو چیک ان کرنا بہت ہی اہم ہے کئی بار سامان اسی لیے کھو جاتا ہے کہ بھاگتے دوڑتے فلائٹ پکڑی جاتی ہے ایسی صورت میں سامان کو جلدی جلدی چیک ان کرتے وقت اس کے ہینڈل میں لگانے والی معلومات میں یا تو کچھ غلطی ہو جاتی ہے یا سامان الگ سے بھیجے جانے کی وجہ سے وہ صحیح جگہ نہیں پہنچ پاتا اس وجہ سے ٹھکانے پر پہنچنے کے بعد پتہ چلتا ہے کہ سامان تو پہنچا ہی نہیں ہے۔

    سیدھی پرواز لینے کی کوشش کریں
    پرواز کی لین بدلی کے وقت سامان غائب ہو جانے کا امکان سب سے زیادہ ہوتا ہے جتنی زیادہ كنیكٹگ پروازیں ہم لیتے ہیں سامان کھونے کیےامکانات بھی اتنے ہی زیادہ ہوتے ہیں اس لئے بہتر ہے کہ جہاں تک ممکن ہو ایک سیدھی پرواز سے سفر کی جائے جس سے ایک جگہ سے ہوائی جہاز پر چڑھے اور دوسری جگہ اتر جائیں۔

    معلومات اور حفاظت کو برقرار رکھیں
    ٹکٹ بک کرواتے وقت انشورنس پالیسی کے بارے میں اچھی طرح سے جانچ پڑتال کر لینی چاہئے عام طور پر سفر میں سامان کھونے پر پانچ سے آٹھ فیصد تک کا خرچ ہی چکایا جاتا ہے اچھا یہی ہے کہ اس موضوع میں تازہ ترین معلومات ایئر لائن سے پہلے ہی لے لی جائیں جب سامان ہمارا ہے تو سیکورٹی ہم سے بہتر اور کون کر سکتا ہےچند احتیاطی تدابیر سے آپ بڑی پریشانی سے بچ سکتے ہیں
    • پسند پسند x 1
    • معلوماتی معلوماتی x 1
    • مفید مفید x 1
  2. نسرین فاطمۃ

    نسرین فاطمۃ رکن

    مراسلے:
    531
    جزاک اللہ خیرا سسٹر
    بہت اچھی معلومات شئیر کیں بہنا ۔۔
  3. josh

    josh رکن

    مراسلے:
    166
    آپنے بہت قیمتی مشورہ دیا ہے ۔شکریہ
  4. بابر تنویر

    بابر تنویر رکن

    مراسلے:
    158
    جزاك الله خيرا

اس صفحے کی تشہیر