کرۂ ارض طاقتور شہاب ثاقب سے بال بال بچ گیا

عندلیب نے 'کائنات کے راز' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏30 مئی 2011

  1. عندلیب

    عندلیب رکن

    مراسلے:
    866
    کرۂ ارض طاقتور شہاب ثاقب سے بال بال بچ گیا

    ایک طاقتورشہاب ثاقب جس کی طاقت 15 جوہری بموں کے مساوی تھی کرۂ ارض اور چاند کے درمیانی فاصلہ کے 10 گنا فاصلہ سے گزر گیا۔

    ماہرین فلکیات نے سگارکیس اخت یہ شہاب ساقب(gp59) دس اپریل کو خلاء میں چکراتے دیکھا اور اس کی نقل و حرکت پر نظر رکھی تھی۔
    روزنامہ "ڈیلی میل" کے بموجب 50 میٹر طویل یہ پہاڑ اگر کرۂ ارض سے ٹکرارتا تو ایک چھوٹا ملک تباہ کرسکتا تھا۔
    لیکن کرۂ ارض سے 2،085،321 میل کے فاصلہ سے گزر گیا اور کسی نے اس پر توجہ بھی نہیں دی۔ اس شہاب ثاقب کی گردش کی رفتار 7 منٹ 30 سکنڈتھی۔

    چنانچہ ہر 4 منٹ میں اس کی چمک تبدیل ہوجاتی تھی۔ حجرسماوی کو 11 انچ کی دوربین سے دیکھا یہ ٹمٹما رہا تھا۔ اس کا مطلب یہ ہے کہ یہ طویل حجر تھا چنانچہ اس کے محور کے پاس اس کا پورا حصہ پہلے نظر آتا تھا اور اس کی گردش کے ساتھ ساتھ اس کا تنگ حصہ نطر آتا تھا۔ یہی وجہ اس کی چمک میں کمی و بیشی یا اس کی گردش کے ساتھ ساتھ اس کا تنگ حصہ نظر آتا تھا۔ یہی وجہ اس کی چمک میں کمی و بیشی یا اس کے ٹمٹمانے کی کوشش کی تھی۔

    بشکریہ: سائنس دنیا ​
  2. رحیق

    رحیق رکن

    مراسلے:
    116
    ایسی خبریں کافی مرتبہ سننے کو ملیں لیکن ہر مرتبہ بعد میں ایسے ہی کہا گیا ۔۔ اللہ واحد قہار نے ہر ایک کا مدار طے کیا ہوا ہے ، بھلا کس کی جراءت ہے کہ وہ اپنے مدار سے نکل سکے ۔۔ ہاں جب میرے رب کے حکم سے صور پھونکا جائے گا پھر ہر شے تہس نہس ہو جائے گی
    انفارمیشن کے لئے شکریہ
  3. waleedi

    waleedi رکن

    مراسلے:
    1
    دن چھوٹا ہونے کی وجہ محور پر تیز گردش ہے۔ اور سب سے چھوٹا سال کس سیارے کا ہے

اس صفحے کی تشہیر