کابلی پلاؤ کی ترکیب درکار ہے

فلک شیر نے 'پکوان' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏29 مارچ 2014

  1. فلک شیر

    فلک شیر منتظم

    مراسلے:
    1,105
    السلام علیکم!
    تمام ارکان سے درخواست ہے کہ کابلی پلاؤ کی ترکیب جس کسی کے علم میں ہے، پیش فرمائیں۔ منتظرم :)
    • پسند پسند x 2
  2. نسرین فاطمۃ

    نسرین فاطمۃ رکن

    مراسلے:
    531
    • پسند پسند x 1
    • شکریہ شکریہ x 1
  3. فلک شیر

    فلک شیر منتظم

    مراسلے:
    1,105
  4. سُہیل مِرزا

    سُہیل مِرزا رکن

    مراسلے:
    21
    فلک شیر بھایئ صاحب
    ساڑھے تین سال بیت جانے کے بعد اِس لڑی کو پِھر حرکت میں لانے کی سعی کرنے جا رہا ہوں۔ افغانی پلاؤ ہمارے ہاں اکثر تیار ہوتا ہے اور بہت شوق سے کھایا جاتا ہے- اکثر مہمان یا عزیز و اقارب جب آتے ہیں تو فرمائیش ضرور کرتے ہیں اور ہمیں بھی اُن کی خِدمت پر بہت خوشی محسوس ہوتی ہے۔
    گو کہ دیئے گئے طریقہِ تیاری پر مُجھے کُچھ اختلاف ہے پھر بھی (اُوپر دی گئی انگریزی زبان میں ترکیب کا)ترجمعہ حاضرِ خِدمت ہے:

    کابلی /افغانی پلاؤ
    بواسطہ: کِچن کوئین


    کابلی پلاؤ یا افغانی پلاؤوسطی ایشیاء سے خوش ذائقہ پکوان ہے جِسے کئی ایک طریقوں سےتیارکیا جاتا ہے۔عام طور پر اِس میں پھول گوبھی، بندگوبھی اور گاجر کے ساتھ ساتھ خُشک میوہ جات بھی شامل ہوتے ہیں۔

    یہ گائے کے گوشت سے تیار کردہ بھی اُتنا ہی لذیز ہے جِتنا کہ بکرے یا پھر دُنبےکے گوشت سے تیارشدہ ۔خاص سبزی خوروں کیلئے صِرف سبزی سے بھی تیار کیا جاتا ہے-

    ایک صحت بحش غذا ہے جو سرما ہو یا گرما ہر موسم میں یکساں مرغوبی سے کھائی جاتی ہے-مُختلِف ذائقوں، رنگوں کے اِمتزاج سے بنا یہ ہردِلعزیز پکوان ایک مکمل غذا بھی ہے-
    اجزاء:
    دُنبے یا گائے کا گوشت-ڈھائی رتل-بڑے ٹکروں میں
    دُنبے یا گائے کے گوشت کی یخنی-ایک کپ
    باسمتی چاول-ڈھائی کپ
    ایک بڑے سائیز کا پیاز-باریک کٹا ہوا
    گرم مصالحہ(پِسامصالحہ:پِسی کالی مِرچ، لونگ، دارچینی) ایک چائے کا چمچ
    زعفران-آدھا چائے کا چمچ
    زیرہ پِسا ہوا-ایک کھانے کا چمچ
    نِمک خوردنی-ایک چائے کا چمچ
    دیسی شکر-ایک کھانے کا چمچ (اختیاری)
    گاجر دو عدد-تیلی نما عمودی کٹی ہوئی
    خُشک میوہ (سؤنگی، زبیب)-ایک کپ
    بادام-آدھا کپ-چھلے ہوئے
    پِستہ-آدھا کپ۔ چِھلا ہوا
    پکانے کا تیل- دو کپ
    پانی- دو کپ

    طریقہِ تیاری:

    ایک پیالے میں چاول بھگو کر رکھ دیں۔
    دیئے گئےتیل کی آدھی مِقدار موٹے پیندے کے کُشادہ برتن /پتیلے میں گرم کریں اور پیاز سُنہری یا پھر بادامی رنگت ہونے تک تل لیں۔اب اِس میں گوشت شامِل کیجیے اور تمام اطراف ہلکا رنگ آنے تک تل لیں۔پھر نمک، گرم مصالحہ اور زعفران شامِل کرنے کے بعدتیل علیدہ ہونے تک مزید تلیں۔اب پانی شامل کریں اور اُبال آنے پر برتن ڈھک دیں اور آگ یا شعلہ مدہم کر دیں۔ گوشت گل جانے تک آگ مدہم رکھیں۔پانی کم ہوجانے پر مزید شامل کیا جا سکتا ہے۔

    ایک برتن میں تھوڑا تیل لیں اور کٹی ہوئی گاجرکو ہلکا ہلکا تلنے کے بعد شکر شامل کریں۔ جب گاجر نرم ہو جائے تو علیحدہ نِکال کر رکھ لیجئے۔
    تھورا اور تیل شامل کرنے کے بعد خُشک میوہ تلیں۔ جب پھول جائے تو اِسے بھی علیحدہ نکال کرمحفوظ رکھیں۔
    پھر بادام اور پِستہ بھی تلنے کے بعد علیحدہ رکھیں۔

    جب گوشت گل جائے تو چھلنی سے علیحدہ نِکال لیں۔ اب اُسی اُبلتے پانی میں چاول اور یخنی شامل کریں۔ پندرہ یا بیس مِنٹ بعد پانی خُشک ہونے پر آ جائے تو پتیلے کوڈھک دیں اور مدھم انچ پردم آنے دیں یا اگر چاہیں تو (ستر فیصد پانی خُشک ہونے کے بعد) پتیلے کو اُون(تنور) میں 300 فارنہائیٹ درجہ پر پندرہ یا بیس مِنٹ مزید رہنے دیں۔

    کھانے کیلئے پیش کرنے سے پہلے چاول ایک سینی میں پھیلالیں۔ چاولوں کے اوپر وسط میں گوشت کے ٹکڑے سجائیں اور گاجر ، خُشک میوہ جات کو سجاتے ہوئے چھڑک لیں اور ایک دفعہ پھر پانچ مِنٹ کے لئےاُون میں رکھیں۔

    سلاد اور چٹنی کے ساتھ گرم گرم پیش کریں۔

    وقت تیاری: پنتالیس مِنٹ

  5. ٹرومین

    ٹرومین رکن

    مراسلے:
    30
    ایک زمانے میں جب ہمیں چاول منع نہیں تھے ہماری مرغوب غذا تھی پر اب تو دور دور سے ہی دیدار کرپاتے ہیں۔

اس صفحے کی تشہیر