امریکہ داعش کا حقيقی چہرہ

fawad نے 'خبروں کی دنیا' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏17 اپریل 2017

  1. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ


    عالمی منظر نامے پر دہشت گردی کے عفريت نے ہر مکتبہ فکر کے لوگوں کو شديد متاثر کيا ہے۔ تاہم بچوں کی نفسيات اور ان کی بہبود پر پرتشدد انتہا پسندی اور دہشت گردی کے منفی اثرات کا تصور بھی نہيں کيا جا سکتا ہے۔ خاص طور پر عراق کے بچوں کی زندگيوں پر اس کے گہرے اثرات مرتب ہوۓ ہيں جو کئ شہروں ميں داعش کی بربريت اور ظلم کے زير اثر رہے ہيں۔


    اقوام متحدہ کی حاليہ رپورٹ ميں اس ضمن ميں چند چشم کشا حقائق سامنے آۓ ہيں۔


    ايک اندازے کے مطابق گزشتہ تين برسوں کے دوران ايک ماہ سے سترہ برس کی عمروں کے درميان گمشدہ ہونے والے بچوں کی تعداد پندرہ ہزار سے تجاوز کر گئ ہے۔ جنگ اور تشدد نے شيعہ، سنی عيسائ يا کسی بھی دوسرے مذہب سے تعلق رکھنے والے خاندانوں ميں کوئ تفريق نہيں رکھی۔


    اقوام متحدہ کے بچوں سے متعلق ادارے يونيسف کے مطابق ہر چار ميں سے ايک عراقی بچہ غربت اور کسمپرسی کا شکار ہے اور اس کی وجہ ملک ميں داعش کے خلاف جاری جنگ ہے۔


    سال 2014 سے اب تک صرف تعليمی اداروں پر ايک سو پچاس سے زائد حملے کيے گۓ اور صحت عامہ کے مراکز اور ملازمين پر پچاس سے زائد حملے ريکارڈ پر موجود ہيں۔ عراق کے نصف سے زائد سکولوں ميں مرمت اور تعمير کی ضرورت ہے اور تين ملين سے زائد بچوں کی تعليم تعطل کا شکار ہے۔


    www.independent.co.uk/news/world/middle-east/iraq-isis-terrorism-united-nations-unicef-middle-east-us-coalition-kuwait-conference-geert-a8205126.html




    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    USUrduDigitalOutreach - Home | Facebook

    Digital Outreach Team (@doturdu) • Instagram photos and videos

    Us Dot | Flickr
  2. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ




    رقہ ميں داعش نے اپنی شکست کے بعد راہ فرار اختيار کرنے سے پہلے زير زمين بارودی سرنگوں کا جال پھيلا ديا جس کی بدولت بے گناہ شہری بدستور لقمہ اجل بن رہے ہيں۔

    داعش نے اپنے اقدامات سے ثابت کيا ہے کہ اپنے کھوکھلے نعروں اور عوام کی بہتری کے ليے اپنی خود ساختہ خلافت کے دعوؤں کے برعکس، اس تنظيم کے دہشت گردوں نے ہميشہ نہتے شہريوں کو اپنے مذموم مقاصد کی تکميل کے ليے استعمال کيا ہے۔

    دانستہ بے گناہ شہريوں کو نشانہ بنانا تا کہ اپنے ايجنڈے اور تسلط کو برقرار رکھنے کے ليے زيادہ سے زيادہ ہلاکتوں کو يقينی بنايا جاۓ، ان کی درندگی اور انسانی جانوں کے ليے بے قدری کو واضح کرتا ہے۔

    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    Security Check Required

    Digital Outreach Team (@doturdu) • Instagram photos and videos

    Us Dot | Flickr
  3. nabeel

    nabeel رکن

    مراسلے:
    56
    داعش آمریکہ کی ایجاد ہے۔
  4. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251

    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    کچھ راۓ دہندگان کے ليے يہ بہت سہل ہوتا ہے کہ امريکہ کو دنيا بھر ميں ہونے والی تمام تر دہشت گردی کے ليے مورد الزام قرار دے ديا جاۓ۔ اس سے نا صرف يہ کہ ان کی پہلے سے طے شدہ سوچ کی عکاسی ہوتی ہے بلکہ امريکہ مخالف جذبات کو بھی تسکين ملتی ہے۔

    تاہم اعداد وشمار اور زمينی حقائق ايک مختلف تصوير پيش کرتے ہيں۔

    دہشت گردی کے عالمی عفريت کے ليے امريکی حکومت کی قيادت ميں برسر پيکار اتحادی قوتيں اور اس ضمن ميں کی جانے والی کوششيں معاشی اعتبار سے امريکہ کو بہت بھاری پڑ رہی ہيں۔ علاوہ ازيں دنيا بھر ميں امريکی شہريوں اور املاک کو جو خطرات لاحق ہو رہے ہيں، اس کو بھی نظرانداز نہيں کيا سکتا ہے۔

    امريکی حکومت جانتے بوجھتے ہوۓ ايسی سوچ کو کيونکر پنپنے دے گی جس کے نتيجے ميں بندوقيں اٹھاۓ ہوۓ داعش کے جنگجوؤں اور خود کش حملوں کے ليے تيار نوجوانوں کی ايک ايسی فوج عالمی منظر نامے پر آ جاۓ جو امريکی شہريوں، املاک اور مفادات کو کسی بھی قسم کا نقصان پہنچانے کے ليے اپنی جانيں تک قربان کرنے کے ليے تيار ہوں؟

    عراق اور شام ميں داعش کو شکست دينے کے ليے امريکی فضائ حملوں کی مہم کو شروع ہوۓ قريب اٹھارہ ماہ گزر چکے ہيں۔ جنوری 2016 کے اعداد وشمار کے مطابق 542 دنوں کی فضائ بمباری کے بعد امريکی بجٹ پر 2۔6 بلين ڈالرز کا بوجھ پڑا۔ یعنی دوسرے لفظوں ميں اس مہم کے دوران ہر گھنٹے پينٹاگون کو 480،000 ڈالرز خرچ کرنا پڑے ہيں۔

    ناقابل ترديد حقيقت يہی ہے کہ آئ ايس آئ ايس کے بڑھتے ہوۓ عفريت سے عام شہريوں کی زندگيوں کو محفوظ رکھنے کے ليے امريکی حکومت نے بيش بہا وسائل اور اپنے ٹيکس دہندگان کے کئ بلين ڈالرز خرچ کيے ہيں۔

    آئ ايس آئ ايس کے خلاف امريکی کاوشوں کے ضمن ميں اہم اعداد وشمار اس کالم ميں پيش کيے گۓ ہيں۔

    US has spent more than $3 billion fighting ISIS | TheHill

    کيا آپ واقعی يہ سمجھتے ہيں کہ امريکی حکومت آئ ايس آئ ايس کے خلاف يہ تمام وسائل کھپانے کے بعد يہ چاہے گی کہ دہشت گردی مزيد پروان چڑھے اور وہ دشمن جس کے خلاف ہم برسر پيکار ہيں وہ مزيد مضبوط ہو؟


    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    USUrduDigitalOutreach - Home | Facebook

    https://www.instagram.com/doturdu/
  5. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    11 Children From Mosul Left Fatherless By ISIS' Brutality

    موصل ميں دو خواتين اور گيارہ بچوں پر مشتمل خاندان کی اندوہناک داستان

    عراق ميں داعش کی بربريت اور دہشت گردی نے کئ خاندانوں کی بنياديں ہلا کر رکھ دی ہيں جن کے اثرات آنے والی نسلوں تک جائيں گے۔

    اکثر واقعات ميں داعش کی بربريت کے نتيجے ميں باپ اور شوہر ہلاک کر ديے جاتے ہيں جس کے نتيجے ميں خواتين اور بچے معاشی اور معاشرتی تحفظ سے محروم ہو جاتے ہيں۔

    پرتشدد انتہا پسندی اور دہشت گردی کے واقعات کے منفی اور دوررس اثرات صرف متاثرہ خاندانوں تک محدود نہيں رہتے بلکہ مستقبل کی نسليں بھی ان جرائم کی سزا کاٹتی ہيں۔

    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    Security Check Required

    https://www.instagram.com/doturdu/

    Us Dot | Flickr
  6. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ


    [​IMG]


    داعش نے افغانستان کے صوبہ ننگرہار ميں طب کے شعبے سے وابستہ تين بھائيوں کے سر قلم کر ديے۔

    ايک برس قبل ان تين بھائيوں کے والد، جو کہ خود بھی ڈاکٹر تھے اسی جبر کا شکار ہوۓ۔

    https://www.reuters.com/article/us-...rothers-in-afghanistan-official-idUSKBN1HU0LS

    عوامی سطح پر اپنی مرضی مسلط کرنے کے ليے داعش کے دہشت گرد ظلم اور جبر کی کوئ بھی حد پار کر سکتے ہيں۔

    چاہے وہ استاد ہوں، مذہبی رہنما يا انسانی جانوں کے تحفظ پر مامور ڈاکٹر – ان مجرموں کے شر سے کوئ بھی محفوظ نہيں ہے۔

    معاشرے کی بہتری کے ليے اپنی خود ساختہ خلافت کے قيام کے داعی داعش کے يہ مجرم اپنے کھوکھلے نعروں کے برعکس ہر اس ادارے، پيشہ وارانہ صلاحيتوں کے حامل کسی بھی شخص يا انسانی قدروں کو خاطر ميں نہيں لاتے جو کسی بھی انسانی معاشرے کی بہتری يا استحکام کے ليے ناگزير تصور کيے جاتے ہيں۔

    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    Security Check Required

    https://www.instagram.com/doturdu/

    Us Dot | Flickr
  7. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ





    افغانستان ميں انتخابی عمل کو روکنے کے ليے دہشت گردوں کی جانب سے مسجد کے تقدس کو بھی پامال کر ديا گيا۔

    دہشت گرد اور پرتشدد انتہا پسند تسلسل کے ساتھ اپنے جرا‏ئم کے توجيہہ کے ليے مذہب کا سہارا ليتے ہيں ليکن اس کے باوجود اپنے مکروہ عزائم کی تکميل کے ليے مساجد اور عبادت گاہوں پر حملوں کو بھی درست قرار ديتے ہيں۔

    افغانستان ميں نماز کے دوران دہشت گردی کا حاليہ واقعہ ايک بار پھر يہ ثابت کرتا ہے کہ دہشت گرد "شريعت" اور "جہاد" جيسے پرجوش نعرے محض نوجوانوں کے ذہنوں کو ايک خاص رخ دے کر اپنے مقصد کے لیے استعمال کرتے ہيں۔ درحقيقت انکی نام نہاد "جدوجہد" کا مذہب سے کوئ تعلق نہيں ہے۔ بصورت ديگر مسجد کے اندرعين نماز جمعہ کے موقع پر حملے کا کيا جواز ہے؟

    يہ کوئ پہلا موقع نہيں ہے کہ دہشت گردوں کی جانب سے مذہبی رسوم کو جان بوجھ کر حملے کی "افاديت" ميں اضافے کے ليے استعمال کيا گيا ہے۔

    يہ امر غور طلب ہے کہ جن عناصر کے نزديک مقدس ترين مذہبی رسومات کا احترام کی بھی کوئ اہميت نہيں وہ اپنی تحريک کو ايک مقدس فريضہ قرار دے کر مذہب کی بنياد پر اس کی تشہير کرتے ہيں۔


    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    USUrduDigitalOutreach - Home | Facebook

    Digital Outreach Team (@doturdu) • Instagram photos and videos

    Us Dot | Flickr
  8. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    عراق : داعش نے پارلیمانی انتخابی امیدوار کی ہلاکت کی ذمّے داری قبول کر لی - صفحہ اول


    عراق ميں داعش کے مجرموں کے ہاتھوں سياسی امیدوار کا بيہيمانہ قتل – گروہ کی جانب سے سوشل ميڈيا پليٹ فارم پر جرم کی ذمہ داری قبول کرنے کے ساتھ مزيد کاروائيوں کی دھمکی۔

    عراقی عوام آنے والے دنوں ميں سنگ ميل انتخابات کی تياری ميں مصروف ہے اور آنے والی نسلوں کے ليے ايک محفوظ اور خوشحال معاشرے کی تشکيل کی خواہش مند ہے۔ تاہم داعش اور اس کے سرغنہ اس ماحول ميں بھی اپنی کاروائيوں سے سب کو يہ باور کروا رہے ہيں کہ عام عوام کے ليے وہ کيا سوچ رکھتے ہيں اور معاشرے ميں کن نظريات کی تشہير کو فوقيت دينا چاہتے ہيں۔

    داعش نے بارہا اپنے الفاظ اور اعمال سے يہ ثابت کيا ہے کہ عام لوگوں کی خواہشات، اتفاق راۓ اور مستقبل کے ليے ان کی اميدوں کی اس گروہ کے نزديک نا تو کوئ اہميت ہے اور نہ ہی يہ ان کے اہداف ہيں۔ خوف، تشدد اور دھونس کے ذريعے عوامی سطح پر اپنی خونی سوچ کو مسلط کرنا ہی اس گروہ کا تسليم کردہ ايجنڈہ اور حکمت عملی ہے۔

    اس بدنام زمانہ تنظيم نے نا صرف يہ کہ اپنے جرم کو تسليم کيا بلکہ اپنے پيغامات ميں اسے اپنی "کاميابی" بھی قرار ديا ہے۔

    دنيا کے کسی بھی دہشت گرد گروہ کی طرح داعش بھی انتخابی عمل سے خائف ہے کيونکہ اس گروہ کے کرتا دھرتا اس حقيقت سے بخوبی واقف ہيں کہ ايسی سوچ اور فکر جو بغير کسی تفريق کے صرف تشدد کو حکمت عملی قرار دے، وہ کبھی بھی عام انسانوں کے دل و دماغ کو نا تو جيت سکتی ہے اور نا ہی قابل قبول ہو سکتی ہے۔

    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    Security Check Required

    Digital Outreach Team (@doturdu) • Instagram photos and videos

    Us Dot | Flickr
  9. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251
    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ


    ISIS claims deadly attack on Belgium police in Liege - Al Arabiya English


    داعش نے اپنی تشہيری مہم ميں گزشتہ ہفتے بيلجيم ميں ہونے والے دہشت گردی کے واقعے کے ليے ناصرف يہ کہ ذمہ داری قبول کر لی ہے بلکہ اس کو اپنی "کاميابی" بھی قرار ديا ہے۔ اس حملے ميں دو خواتين اور ايک طالب علم ہلاک ہوۓ تھے۔

    ايک جانب تو داعش اپنے تشہيری مواد ميں سر گرم دہشت گردوں کے ليے "فوجی" کی اصطلاح استعمال کرتی ہے۔ ليکن يہ نام نہاد فوجی اپنے خونی ايجنڈے کی تکميل کے ليے ميدان جنگ کی بجاۓ شہری علاقوں کو ترجيح ديتے ہيں اور عورتوں او بچوں سميت طالب علموں کو نشانہ بنا کر اسے اپنی کاميابی گردانتے ہيں۔

    کوئ بھی سياسی اور مذہبی سوچ اور نظريہ جو اجتماعی سطح پر انصاف، امن اور خوشحالی کا پيغام دے، دانستہ عام شہريوں کی ہلاکت کو درست قرار نہيں دے سکتا ہے۔

    حقيقت يہی ہے کہ اپنے بلند وبانگ دعوؤں کے برخلاف داعش محض عادی مجرموں اور قاتلوں کا ايک گروہ ہے جو اپنے سياسی عزائم کی تکميل کے ليے دہشت، خوف اور بربريت کے استعمال پر يقين رکھتا ہے۔



    فواد – ڈيجيٹل آؤٹ ريچ ٹيم – يو ايس اسٹيٹ ڈيپارٹمينٹ

    digitaloutreach@state.gov

    www.state.gov

    https://twitter.com/USDOSDOT_Urdu

    Security Check Required

    https://www.instagram.com/doturdu/

    Us Dot | Flickr
  10. fawad

    fawad امریکی نمائندہ

    مراسلے:
    251

اس صفحے کی تشہیر